Thursday, 5 May 2011

کوئی بتلائے تو؟

اگر میں غلطی پر نہیں ہوں تو رحمان ملک انکل نے کبھی کہا تھا کہ اگر اسامہ بن لادن پاکستان سے برآمد ہوا تو وہ اپنی ناک کٹوا دیں گے۔ انہیں کون یاد کروائے گا ان کا وعدہ؟
اور اگر میں پھر غلطی پر نہیں ہوں تو ہنگامی ایکشن کا مطلب فوری ایکشن کرنا ہے تو اپنے انکل کیانی نے اسامہ کی امریکی بھائیوں کے ہاتھوں ملکِ عدم راونگی (وہ بھی عین فوجی علاقے سے) کے 4 دن بعد کور کمانڈرز کی 'ہنگامی کانفرنس' کیوں بلائی ہے۔ اب انہیں کون سمجھائے گا ہنگامی کا مفمہوم؟

6 comments:

  • افتخار اجمل بھوپال says:
    5 May 2011 at 17:04

    رحمان ملک کا بڑا بھائی جو ہمارے غريب ملک کا امير ترين بادشاہ ہے يعنی آصف علی زرداری وہ کہتا ہے "وعدہ کو آيت يا حديث نہيں ہوتی کہ بدلا نہ جا سکے"
    غلط سلط باتيں نہيں کرو بی بی ۔ ميری طرح پاگل ہو جاؤ گی

  • یاسر خوامخواہ جاپانی says:
    5 May 2011 at 17:21

    ناک والے ناک کٹواتے ہیں۔
    جن کی کوئی عزت ہی نہ ہو اور جنہیں عزت کا مفہوم ہی نامعلوم ہو۔
    وہ ۔۔۔۔۔ :dumb :dumb :dumb

  • خرم ابن شبیر says:
    5 May 2011 at 17:59

    میرے والا جواب تو یاسر بھائی دے گے ہیں۔
    اب میں کیا جواب دوں

  • م بلال says:
    18 May 2011 at 05:53

    اجی یہ لوگ تو ایسے ایسے وعدے کرتے ہیں اگر پورے کریں تو ہمارے ملک کا نظام ایک دن میں ٹھیک ہو جائے اور ان کرپٹ لوگوں سے ہماری جان بھی چھوٹ جائے کیونکہ ان کے وعدے اگر پورے ہوں تو سب سے پہلے یہی لوگ گھر پہنچیں گے۔ باقی میں بھی وہی کہوں گا جو یاسر بھائی کہہ چکے ہیں۔

  • میاں فاروق says:
    2 September 2011 at 00:42

    جو آدمی جھوٹ بولتا ہے وہ اپنے وعدے کیسے پورے کرے گا

  • فرحت کیانی نے لکھا :۔
    5 September 2011 at 09:31

    @ میاں فاروق: متفق علیہ۔
    بلاگ پر خوش آمدید :)

آپ بھی اپنا تبصرہ تحریر کریں

اہم اطلاع :- غیر متعلق,غیر اخلاقی اور ذاتیات پر مبنی تبصرہ سے پرہیز کیجئے, مصنف ایسا تبصرہ حذف کرنے کا حق رکھتا ہے نیز مصنف کا مبصر کی رائے سے متفق ہونا ضروری نہیں۔

اگر آپ کے کمپوٹر میں اردو کی بورڈ انسٹال نہیں ہے تو اردو میں تبصرہ کرنے کے لیے ذیل کے اردو ایڈیٹر میں تبصرہ لکھ کر اسے تبصروں کے خانے میں کاپی پیسٹ کرکے شائع کردیں۔